ٹیپو سلطان کا سفر آخرت

وہ عالمِ تصور میں میسور کے شیر کو ایک خوفناک دھاڑ کے ساتھ اپنے پرحملہ آور ہوتا دیکھ کر چونک جاتا تھا‘ اسکی سپاہ سرنگا پٹم کے میدان میں جمع ہونے والے سپاہیان اسلام کی نعشوں میں میسور کے شیر کو تلاش کر رہے تھے

مسلمانوں کے ملک میں پرندے بھوک سے نا مر جائیں

زیر نظر تصویر ترکی کی ہے جہاں ایک بہت پرانی اسلامی روایت ابھی تک زندہ ہے کہ جب سردی کا عروج ہو اور پہاڑوں پر برف پڑ جائے تو یہ لوگ چوٹیوں پر چڑھ کر اس وقت تک دانہ پھیلاتے رہتے ہیں جب تک برفباری ہوتی رہے۔ اور یہ اس لیئے ہے کہ پرندے اس موسم میں کہیں بھوک سے نا مر جائیں۔

پاپا نے پادری بنانا چاہا ۔۔۔مگر۔۔۔؟

میں اپنے کسی کام کے سلسلہ میں ’’تیونس‘‘ گیا۔ میں اپنے یونیورسٹی کے دوستوں کے ساتھ یہاں کے ایک گاؤں میں تھا۔ وہاں ہم دوست اکٹھے کھا پی رہے تھے۔ گپ شپ لگا رہے تھے کہ اچانک اذان کی آواز بلند ہوئی اللہ اکبر اللہ اکبر۔۔۔

داستان ایک متکبر کی

سبحان الله ! یہ تھا اسلام کا انصاف

میں اپنا ثواب نہیں بیچوں گا

عموریہ کی جنگ میں پیش آنے والا ایک دلچسپ واقعہ

ستمبر 15, 2010

Tashkeel e Pakistan ke Rohani Bishartein.



Tashkeel e Pakistan ke Rohani Bishartein. Ahem Iqtabasat k ainay main

by GM saqib published in Monthly Mirat ul Arifeen International

Courtesy Alfaqr.net.

Aalmi Tanzeem ul aarfeen





Page_5

14 august pakistan independance day jashn e azadi. a beautiful article writen by G.M saqib published in monthly iraat ul arifeen international.

History of pakistan
spritual dimentions of pakistan
Why was pakistan made.

8 comments:

  1. every pakistani must read this so that he can know the importaance of this counry

    جواب دیںحذف کریں
  2. From where i can get this magazine "Mirrat ul Arifeen international"

    جواب دیںحذف کریں
  3. mirat ul arifeen is published from Lahore and i think it is available in every part of pakistan.

    you can also read this magzine online on

    http://alfaqr.net

    جواب دیںحذف کریں
  4. great. mujy Pakistani hony pr fakhar hai!

    جواب دیںحذف کریں
  5. everyone should read this Great knowledge about their beautiful PAKISTAN!!!!!

    جواب دیںحذف کریں
  6. great knowledge
    mujhay pakistani honay per fakhar ha
    pakistan zindabad

    جواب دیںحذف کریں