ٹیپو سلطان کا سفر آخرت

وہ عالمِ تصور میں میسور کے شیر کو ایک خوفناک دھاڑ کے ساتھ اپنے پرحملہ آور ہوتا دیکھ کر چونک جاتا تھا‘ اسکی سپاہ سرنگا پٹم کے میدان میں جمع ہونے والے سپاہیان اسلام کی نعشوں میں میسور کے شیر کو تلاش کر رہے تھے

مسلمانوں کے ملک میں پرندے بھوک سے نا مر جائیں

زیر نظر تصویر ترکی کی ہے جہاں ایک بہت پرانی اسلامی روایت ابھی تک زندہ ہے کہ جب سردی کا عروج ہو اور پہاڑوں پر برف پڑ جائے تو یہ لوگ چوٹیوں پر چڑھ کر اس وقت تک دانہ پھیلاتے رہتے ہیں جب تک برفباری ہوتی رہے۔ اور یہ اس لیئے ہے کہ پرندے اس موسم میں کہیں بھوک سے نا مر جائیں۔

پاپا نے پادری بنانا چاہا ۔۔۔مگر۔۔۔؟

میں اپنے کسی کام کے سلسلہ میں ’’تیونس‘‘ گیا۔ میں اپنے یونیورسٹی کے دوستوں کے ساتھ یہاں کے ایک گاؤں میں تھا۔ وہاں ہم دوست اکٹھے کھا پی رہے تھے۔ گپ شپ لگا رہے تھے کہ اچانک اذان کی آواز بلند ہوئی اللہ اکبر اللہ اکبر۔۔۔

داستان ایک متکبر کی

سبحان الله ! یہ تھا اسلام کا انصاف

میں اپنا ثواب نہیں بیچوں گا

عموریہ کی جنگ میں پیش آنے والا ایک دلچسپ واقعہ

اکتوبر 1, 2010

Hamari Jamhoreat ko character chahiay

Zero Point by Javed Chaudhery 25 Jun 10

June 25, 2010


                         

3 comments:

  1. Hamain is 2 number jamhoreat ko bachanay ke zarorat nahe.

    we want our Islamic shareat to be implemented in pakistan.

    جواب دیںحذف کریں
  2. my dear, intahai afsoos k sath yeh likhnay ki jurat kar raha hun k aap konsi islami shariat lanay ke naweed suna rahay hain, afghanistan walli talbaniat ya iran wali shora. kia aap ki comiunity kise aik ko manany pr tayar ho jai ge. junab moulana diesel ko aap kon sa rool daina chanhain gay.
    yeh ulma hazrat jo kisi ka hath bandna aur khool kar parhnay ko brdasht nahi kar sakty wo konsi shariat pr yak zubaun houn gay. aap kis dunia pain reh kr yahan shariat ke amal dari ki baat karty ho. ham nay to un ko bhi daikha hay jo shariat ka dikhlawa dikha kar kafan band kar ghars say niklay aur un k ameer ny apni qimat wasool pa ki. afsoos.afsoos.
    great-chakwal.blogspot.com

    جواب دیںحذف کریں
  3. malik bhai you are right that there are differences.
    koe hath band kar namaz parta hai ore koe khol kar. lakin koe b aik firqa aisa nhe jis main rakoo b do hun ya sajday 3 hon, is leay ham sab aik jamat main namaz b paar saktay hain. sirf baat soch ke hai k agar wo soch paida ho jae.

    ye b sach hai k shareat k naam pe kae dramay ho chukay hain ore ho b rhay hain but is k bawajood shariat is the only solution for mankind.

    shareat se muraad sirf shari qawaneen nahi hotay. Islam na hamain aik socio-economic system b dia hai, aik islamic judicial system b hai, jo insaneat ke falah k leay zarori hai, in chotay chotay differences k bawajood aaj b ye system applicable ho saktay hain, is main koe doubt nhe, koe aitraaz ke waja nhe.

    Islam is complete, absolute and best way of life. is se zyada acha nizaam dunya na aaj tak nhe daikha.

    جواب دیںحذف کریں